32

ایک ماہ میں ایسا کیا ہوا کہ گروتھ ریٹ 4 فیصد ہو گیا ، محمد زبیر

 پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق گورنر سندھ محمد زبیر نے کہا کہ ایک ماہ قبل موجودہ وزیر خزانہ نے اعتراف کیا کہ معیشت کا بیڑہ غرق ہو چکا ہے ، ایک ماہ میں ایسا کیا ہو گیا جو گروتھ ریٹ 4 فیصد ہو گیا۔

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے محمد زبیر کا کہنا تھا کہ  موجودہ حکومت میں دو کروڑ افراد خط غربت سے نیچے چلے گئے، موجودہ حکومت میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری 33 فیصد کم ہوئی ، سرمایہ کاری نہیں تو معیشت کیسے چلے گی، نوکریاں کہاں سے آئیں گی ،  ہمارے زمانے میں پہلے سال ہی ترقی کی شرح چار فیصد سے بڑھ گئی تھی ، یہ آج لڈیاں ڈال رہے ہیں ۔

محمد زبیر نے کہا کہ ہم 3.9 فیصد گروتھ کو مانتے ہی نہیں ، سارے ادارے کہہ رہے ہیں کہ گروتھ ریٹ دو فیصد سے زیادہ نہیں ہے ، تین سال میں لاکھوں لوگوں کو بیروزگار کیا گیا، اگر معیشت اچھی ہے تو کیا آج نوکریاں مل رہی ہٰیں ۔ہمارے دور میں گروتھ ریٹ بڑھ رہا تھا  اور غربت کم ہو رہی تھی ۔عمران خان کی حکومت نے ٹیکس بڑھا دیے ، بجلی کے نرخ بڑھا دیے ۔ غربت اور بیروزگاری کا طوفان آیا ہوا ہے ۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں