89

بلوچستان اسمبلی کا ہنگامہ خیز اجلاس آج ہوگا

 بلوچستان اسمبلی کا ہنگامہ خیز اجلاس آج ہوگا، بی اے پی کے ناراض اراکین کی جانب سے وزیراعلیٰ کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک پیش کی جائے گی۔ جام کمال کا کہنا ہے کہ یہ چند لوگ اپنے عزائم میں کامیاب نہیں ہونگے۔

اجلاس کی صدارت اسپیکر عبدالقدوس بزنجو کریں گے۔ 14 ناراض اراکین کے دستخط سے تحریک عدم اعتماد ایوان میں پیش کی جائے گی۔ جس پر ناراض اور اپوزیشن اراکین اپنا موقف پیش کریں گے۔

اسپیکر کی جانب سے وزیراعلی کو اپنی اکثریت ثابت کر کے اعتماد کا ووٹ لینے کے لئے کچھ وقت دیا جائے گا۔ جس کے بعد اعلان کردہ تاریخ پر ایوان میں تحریک عدم اعتماد پر رائے شماری ہوگی۔

حکمران جماعت بلوچستان عوامی پارٹی کے رہنما ظہور احمد بلیدی کا کہنا ہے کہ 36 ممبر شو کر دئیے، 65 کے ایوان میں 40 ارکان کی حمایت حاصل ہے۔ ملک سکندر، اسد بلوچ اور دیگر رہنماؤں نے بھی وزیراعلیٰ جام کمال کو مستعفی ہونے کا مشورہ دے دیا۔ 65 ارکان کی بلوچستان اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد کے لیے 33 ارکان کی حمایت کی ضرورت ہے۔
 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں