36

رنگ روڈ منصوبے میں کرپشن کے مرکزی مجرم وزیر اعظم ہیں ، مریم اورنگزیب

مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ رنگ روڈ منصوبے میں کرپشن کے مرکزی مجرم وزیر اعظم ہیں ، عمران خان اور عثمان بزدار کو گرفتار کیا جائے سب کچھ عمران خان اور عثمان بزدار کے احکامات اور نگرانی میں ہوا، عمران صاحب نے رنگ روڈ منصوبے میں بھی چالاکی سے وہی کچھ کیا جو چینی، آٹا سکینڈل سبسڈی میں کیا .یہ تسلسل ہے کہ چوری کے حکم دو، پھر دیہاڑی لگاؤ، افسروں سے کام کراؤ اور پھر ان کو قربانی کا بکرا بناؤ۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران صاحب نے 4 فروری 2021 کو رنگ روڈ منصوبے میں تبدیلیوں کی خود منظوری دی، پھر خود ہی انکوائری کرائی؟، واہ عمران صاحب واہ ،اپنے ہی دئیے ہوئے حکم کی انکوائری کیوں کرا رہے ہیں ، حکم دے کر کس فائدہ دیا اور منصوبہ روک کر کس کو فائدہ دے رہے ہیں۔

ترجمان مسلم لیگ ن کا کہنا تھا کہ حکم عمران خان دیں ، بزدار صاحب عمل کرنے کے احکامات دیں اور قربانی سرکاری افسر کیوں دیں؟ دیہاڑی دارتو دیہاڑی لگا کر چلے جائیں گے ، بعد میں سرکاری افسران اور بیوروکریسی پھنس جائے گی .بیوروکریسی اور سرکاری افسران ان دیہاڑی داروں کے احکامات نہ مانیں۔ عمران صاحب اور عثمان بزدار نے رنگ روڈ کی ری الائنمنٹ کا حکم دے کر دیہاڑی لگائی اور اب منصوبہ روک کر متنازعہ بنا کرپھر دیہاڑی لگا رہے ہیں .پہلے حکم دے کر اور اس پر عثمان بزدار کے ذریعے عمل کراکے دیہاڑی لگائی، پھر انکوائری اور عملدرآمد روک کرایک اور دیہاڑی لگائی۔

مریم اورنگزیب نے کہا عمران صاحب آپ کی جعلسازی، جھوٹ اور دیہاڑی کا پردہ آپ کے28جنوری 2021 کے اپنے حکم نامے اورسرکاری دستاویز نے فاش کردیا ہے.ملک پر مسلط وزیراعظم اور اس کی پوری کی پوری کابینہ ’دیہاڑی دار‘ ہے۔عمران صاحب اور کابینہ ہر صبح بیدار ہوکر منصوبوں سے دیہاڑی لگاتے ہیں ، عمران صاحب نے خود حکم دے کر،اپنے کٹھ پتلی عثمان بزدار سے عمل کرایا، افسروں سے تمام کام کروایا اور اب افسروں کو قربانی کا بکرا بنارہے ہیں؟۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں