119

قیام بنگلہ دیش کی وجوہات کو پاکستان کے تعلیمی نصاب میں کیسے پیش کیا جاتا ہے؟

پاکستان کے تعلیمی نصاب میں قیام بنگلہ دیش کا تفصیل سے ذکر نہ ملنے پر جہاں ماہرین تنقید کرتے ہیں وہیں یہ بھی کہتے ہیں کہ ’ہر ریاست اپنا فرض سمجھتی ہے کہ اپنے شہریوں کی پرورش ایک خاص بیانیے کے تحت کرے اور اس تناظر میں شاید پاکستان واحد یا انوکھی ریاست نہیں جو ایسا کرتی ہے۔‘

بنگلہ دیش کے بانی شیخ مجیب الرحمٰن ’آزادی کے خود ساختہ ڈرامے میں کامیاب ہو گئے۔‘، ’مشرقی پاکستان کی علیحدگی بڑی طاقتوں کے درمیان خفیہ معاہدہ تھا۔یہ چند ایسے فقرے ہیں جو پاکستان کے منظور شدہ تعلیمی نصاب میں مطالعہ پاکستان کی کتاب سے لیے گئے ہیں۔ اس کتاب میں مشرقی پاکستان کہلائے جانے والے حصے کو وفاقِ پاکستان کا ’دایاں بازو‘ قرار دیا گیا جسے مغربی پاکستان سے اندرونی و بیرونی اسباب کے باعث علحیدہ ہونا پڑا۔

بنگلہ دیش کے قیام کو اب 50 سال بیت گئے ہیں مگر آج بھی وہاں سے آواز اٹھتی ہے کہ پاکستان بنگلہ دیشی عوام سے معافی مانگے۔ بنگلہ دیش پاکستان پر جنگی جرائم کے علاوہ دیگر الزامات عائد کرتا رہا ہے جس کی تردید بھی ریاست پاکستان کی جانب سے تواتر سے آتی رہی ہے۔

لیکن کیا پاکستانی نصاب میں ان الزامات کا یا بنگلہ دیش کی آزادی کی جدوجہد کا کہیں ذکر بھی ہے؟

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں