12

پنجاب میں فلور ملز کا منگل سے ہڑتال کا اعلان

پنجاب کی فلور ملز نے مختلف مطالبات منظور نہ ہونے پر منگل سے ہڑتال پر جانے کا اعلان کر دیا۔


ملز مالکان کے مطابق حکومت کی طرف سے مطالبات کو منظور کرنے میں ٹال مٹول کی وجہ سے وہ انتہائی قدم اٹھانے پر مجبور ہوگئے۔

فلور ملز مالکان کا مطالبہ ہے کہ 100 کلو گرام گندم کی پسائی کو 600روپے کیا جائے، میدے اور چوکر کی شرح بڑھائی جائے اور 20 کلو تھیلے کی قیمت میں کم ازکم 50 روپے اضافہ کیا جائے۔

ملز مالکان کہتے ہیں کہ ستمبر کے آخری ہفتے میں ہونے والے معاہدے سے حکومت مکر گئی ہے۔ معاہدے میں طے پانے کے باوجود نہ آٹے کی قیمت بڑھائی گئی اور نہ پسائی کے خرچے میں اضافہ ہوا۔

صوبائی چیئرمین پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن طاہر ملک کا کہنا ہے کہ 24 ستمبر کو پریس کانفرنس میں ڈائریکٹر فوڈ پنجاب نے کئی اعلانات کیے تھے جن پر عمل درآمد نہیں ہوا، اس لیے منگل سے ہڑتال کریں گے۔

ملز مالکان کا کہنا ہے کہ کم گندم کی فراہمی کی وجہ سے لاہور سمیت پنجاب بھر میں سستے آٹے کی دستیابی متاثر ہوئی ہے۔ اگر گندم کی دستیابی بڑھائی نہ گئی تو بحران میں اضافہ ہوتا جائے گا۔

پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن کے رہنما عاصم احمد رضا کا کہنا تھا کہ لاہور میں اس وقت ملز کو ضرورت سے کم آٹا دیا جا رہا ہے، اگر ملز کو فراہمی بڑھا دی جائے تو شہر میں آٹے کا بحران نہیں ہوگا۔

واضح رہے کہ پاکستان میں اس سال 2کروڑ 70لاکھ ٹن گندم پیدا ہوئی تھی جبکہ 20لاکھ ٹن گندم درآمد کی جا رہی ہے۔ ماہرین کے مطابق گندم سپلائی کے نظام میں بہتری آجائے تو کسی قسم کی قلت نہیں ہوسکتی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں