91

کشمیری عوام بدترین معاشی صورتحال کا شکار ہے، وزیر خارجہ

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی  نے کہا ہے کہ کشمیری عوام  بدترین  معاشی صورتحال کا شکار ہے۔

شاہ محمود قریشی  نے  او آئی سی کے نمائندہ خصوصی برائے جموں و کشمیر یوسف الدوبے کے ہمراہ مشترکہ  پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ او آئی سی کے نمائندہ  خصوصی کو میامی اجلاس میں خصوصی ذمہ داریاں دی گئی تھیں، انھیں یہ ذمہ داری دی گئی تھی کہ وہ کشمیر جائیں اور صورتحال سے آگاہ کریں۔ مارچ 2022 میں اسلام آباد میں ہونے والے اجلاس میں اپنی رپورٹ پیش کریں، یوسف الدوبے کا دورہ ان ہی ذمہ

داریوں کے تناظر ہو رہا ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ کشمیری عوام بدترین  معاشی صورتحال کا شکار ہے، بھارت کے 2019 کے اقدامات کے نتیجے میں کشمیر کی معیشت کو ساڑے نو ارب ڈالر کا نقصان ہوا ہے۔

 شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی المیہ جنم لے رہا ہے جبکہ مقبوضہ کشمیر جبر ظلم و زیادتی کئی دہائیوں سے جاری ہے اور مقبوضہ کشمیر کی معیشت کو ساڑھے نو ارب ڈالر نقصان ہو چکا ہے۔

وزیر خارجہ کا  یہ بھی کہنا تھا  کہ5 اگست 2019 کے بعد بھارتی مظالم کی انتہا نہیں، مقبوضہ کشمیر کے عوام بھارتی حکومت سے بدزن ہوچکی ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اوآئی سی کے نمائندے کی آمد سے کشمیریوں کے حوصلے بلند ہوئے، او آئی سی کے وزراء خارجہ کا آئندہ اہم اجلاس مارچ 2022میں ہوگا، آئندہ اجلاس میں کشمیر میں بھارتی مظالم کو اجاگر کیا جائے گا۔

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی  کا مزید کہنا تھا کہ خصوصی نمائندے نے آزادی کے ساتھ آزاد کشمیر کا دورہ کیا اور میڈیا سے بات چیت کی، امید رکھتے ہیں کہ بھارت او آئی سی کے نمائندے کو مقبوضہ کشمیر کے دورے کی اجازت دے گا۔

 اس موقع پر او آئی سی کے خصوصی نمائندے برائے جموں و کشمیر یوسف الدوبے نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ او آئی سی وفد کشمیر کے مسئلے کو اجاگر کرنے پاکستان آیا ہے، نیویارک ملاقات میں ہم نے اس دورے کی اہمیت کو اجاگر کیا۔

 یوسف الدوبے  کا کہنا تھا کہ ہمیں مقبوضہ کشمیر کی عوام میں بڑی تبدیلی دکھائی دے رہی ہے۔ ہمارا پانچ روز کا دورہ بہت فائدہ مند رہا، ہم اپنی تفصیلی رپورٹ مارچ میں

کونسل آف فارنمنسٹرز اجلاس میں پیش کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ سید علی گیلانی کی تدفین پر بھارت نے جو کیا وہ دنیا کے سامنے ہے، سید علی گیلانی کے جنازے میں لوگوں کے ہجوم کے ڈر سے ہندوستان نے پابندیاں لگائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں